ملک کے لیے لڑنے والے مسلمان شہید؟


ایک سوال کیا گیا کہ زید انڈین آرمی میں کمانڈر ہے اور اس کے دستے میں سب خوش عقیدہ مسلمان ہیں تو اگر وہ پاکستان سے جنگ کرتے ہوئے مارے جائیں تو ان پر شہید کا حکم نافذ ہوگا یا نہیں؟ 


اس کے جواب میں تاج الفقہا، علامہ مفتی اختر حسین قادری رحمہ اللہ تعالٰی فرماتے ہیں کہ شریعت میں شہید وہ ہے جو اللہ کے دین کی سربلندی کے لیے جنگ کرے اور اس راہ میں مار ڈالا جائے چنانچہ علامہ بیضاوی لکھتے ہیں :


الشھداء الذین ادرء بھم الحرص الطاعۃ والحد فی اظھار الحق حتی بذلوا مھجھم فی اعلاء کلمۃ اللہ


اور علامہ شیخ زادہ علیہ الرحمہ تحریر فرماتے ہیں :


الشھید من قام بشھادۃ الحق و العمل بہ الی ان قتل فی سبیل اللہ

(تفسیر بیضاوی، ج2، ص148)


اس وضاحت سے معلوم ہوا کہ جو مسلمان پاکستان وغیرہ ممالک سے جنگ کرتے ہوئے مارے جائیں وہ شرعا شہید نہیں ہیں کہ وہ لوگ اسلام کی سربلندی کے لیے نہیں لڑتے۔


(فتاوی علیمیہ، ج1، ص320)


عبد مصطفی آفیشل

Post a Comment

Leave Your Precious Comment Here

Previous Post Next Post